Albani’s Methodology in Textual Analysis of Hadith: An Analysis of Sheikh Shoaib Al-Arnaoot’s Criticism on Albani

Muhamad Ayub, Muhammad Akram, Muhammad Jan

Abstract


Debate is that, Allama Shoaib (R.A) criticism (that Allama Albani not focus on three Hadith) is wrong. Because the translation of Hadith he presented as logic is basically called “Husn”. Not only Allama Albani (R.A) even other number of Scholars are agree on this. Allama Shoaib (R.A) completely denies the compliance of Tarjih-o-Tatbig that is incorrect. So to don’t any Sahih Hadith that oppose other Sahih Hadith is not good it. Tatbig-o-taufeeq possible on both Side. This is the rule of Scholars. Try to Tatbig-o-tuafiq in oppose Ahadith due to this rule Hafiz ibn-qasoem (R,A) narrate more 8 “Mulk” So the point of Allama Shoaib three (3) Ahadith is incorrect. Review comments on criticism (Made By Allama Shoaib on Albani R,A) in 3 Ahadith. 

Full Text:

PDF

References


سورۃ آل عمران: 3: 31-32

Surah Aal-e-Imran:3:31-32

سورۃ النساء:4: 80

Surah Al-Nisa:4:80

سورۃ النساء:4: 65

Surah Al-Nisa:4:65

سورۃ النور:24: 63

Surah Al-Noor:24:63

علامہ محمود سعید ممدوح،جامعہ ازہر،مصر میں حدیث کےاستاد ہیں۔اور البانی ؒ کے بڑے نقاد ہیں اور انھو ں نے البانی ؒ پر نقد کرتے ہوئےکتاب لکھی ہے۔التعریف باوھام من قسم السنن الی صحیح وضعیف۔یہ کتاب چھ جلدوں پر مشتمل ہے،یہ علامہ البانی ؒ پر اپنی نوعیت کی مفصل تنقید ہے جس میں علامہ البانی ؒ کی تصحیحات وتضعیفات کا تعاقب کیا گیا ہے۔تنبیہ المسلم الی تعدی الالبانی علی صحیح مسلم

پروفیسر ڈاکٹر علی عبدا لباسط مزید،جامعہ ازھر کے مشہور اساتذہ میں ہیں،جنہوں نے علامہ البانیؒ کی تحقیقی علمی خدمات کا اعتراف کیا اور ان پر نقد کرتے ہوئے کتابیں لکھی ہیں۔"التعقبات الحدیثیۃ علی الشیخ الالبانی " Al-Taaqubat-ul-Hadithisiyya ala al-Sheikh Albani "،"لقطات ممّا وھم فیہ الالبانی من تخریجات وتعلیقات"Laqatatu Mimma Wahama Feehil Albani Min Takhrijatin wa taliqatin

"الشیخ البانی بین الحدیث والفقہ"

Shiekh Albani Bain-al Hadith wa-al-Fiqh

اس کتاب میں بھی علامہ البانی ؒ پر تفصیلی رد ہے۔

القول المقنع فی الرد علی الالبانی للعلامۃ عبدا للہ بن الصدیق الغماری

Al qowalol moqna fir rada Alal Al Bani Lil Allama abdullah bin Siddique Al Ghumari

،اس کتاب میں "غماریؒ" نے علامہ البانیؒ پر سخت تنقید کی ہےاور ضعیف احادیث پر عمل نہ کرنے کے متعلق امام البانیؒ کے موقف پر رد کیا ہے۔

 الرسائل الغماریۃ جزء فی الرد علی الالبانی،وبیان بعض تدلیسہ وخیانتہ

Al Risayl Al Ghomaria Juz fil raddy Alal Albani, wa biyan Bazy Tadlisihi wa kheyanatihi

 ارغام المبتدع الغبی بجواز التوسل بالنبی وا لرد علی الالبانی

Irgamul Mubtadyl ghabiye bijawazul Tawassul bil Nabbiye Wal Raddy ala Albani

 "الاعلام بان التصوف من شریعۃ الاسلام

 Alalaam biannal tasawofa min shariaytaal islam

 " یہ معروف عالم دین محدث شیخ عبدا للہ الغماریؒ کی کتاب ہے ۔شیخ عبداللہ الغماری ؒ تصوف کی طرف زیادہ مائل تھے،مغرب میں کبار علماء سے استفادہ کیا ،ان میں ان کے بڑے بھائی علامہ احمد الغماریؒ بھی شامل ہیں۔58کتابوں کے مصنف تھے،1993ء"طبحہ "میں فوت ہوئے۔رحمۃ اللہ رحمۃ واسعۃ

مفصل اور افراط پر مبنی تنقیدات معروف اردنی عالم حسن بن علی سقاف نے کی ہے،موصوف فکر منہج سلف کے خلاف غالی نظریات کے حامی ہیں۔

 تناقضات الالبانی الواضحات فی ماوقع لہ فی تصحیح الاحادیث وتضعیفھا من اخطاء وغلطات۔

 Tanaqozaat ul bani alwazihat Al Wazhat fi ma Waqaa Lahu fe tasheehil Ahadith wa tazeefiha min Akhtaae wa ghiltaatin

 قاموس من شتائم الالبانی۔

Qamooson min shataimil albani

 مجموع رسائل سقاف

Majmooe Risayla Saqqaf

 التنکیل بما فی کتب الالبانی من التناقضات والا باطیل

Al tankilo bima fe kutubil Albani mina t tanaquzaty Wal Batily

اسی طرح عرب کے مشہور عالم دین شیخ اسماعیل بن محمد انصاریؒ نے امام البانیؒ پر سخت تنقید کی اور کتابیں لکھی۔

 تعقب لبعض اغلاط الالبانی

Taaqiba l baz Aghlat Albani

 تعقبات علی سلسلۃ الاحادیث الضعیفۃ والموضوعۃ، للالبانی

Taaqubat Ala silsila tul Ahadith al zaeefat Wal mozooat ul Albani

 تصحیح حدیث صلاۃ التراویح عشرین رکعۃ ،والرد علی الالبانی فی تضعیفہ

Tasheeho hadith Salaty l taravih Ashrina rakatn, walraddo alal Albani fe tazeefihe

 نقد تعلیقات الالبانی علی شرح العقیدہ الطحاویۃ

Naqdo Taaliqaatul Albani Ala sharhyl al Aqeedatyl tahaweeya

شیخ عبد الفتاح ابو غدہ ؒ البانی ؒ کے سخت ناقد تھے،جنہوں نے مختلف فقہی مسائل میں ہمیشہ البانی ؒ کی مخالفت کی اور دونوں کےدرمیان تنقیدات کا یہ سلسلہ جاری رہا اور شیخ عبد الفتاح ابو غدہؒ نے علامہ البانی ؒ کے بارے میں کتابیں لکھیں۔

 کلمات فی کشف اباطیل وافتراءات وھی رد علی اباطیل ناصر الدین الالبانی

Kalimatn fe kashfe Abatily wa iftaraatun wahiya raddun ala abatily Nasir u din albani

 خطبۃ الحاجۃ لیست سنۃ فی مستھل الکتب والمؤلفات۔

Khutbat ul hajaty lysat sunnatn fe mustahylil kutubi wal muallafaty

 علامہ حبیب الرحمن ؒنے "الالبانی شذوذہ واخطاءہ "Al Albaniyyo shozozoho Wa akhtaoho

کتاب لکھی۔ علامہ البانی ؒ کے دو شاگردوں نے علامہ سلیم ہلالی اور علامہ حسن حلبی نے دو جلدوں میں اس کتاب کا جواب"الرد العلمی علی حبیب الرحمن الاعظمیٰ "

Al Raddul Ilmiyo Ala habib Al rehman al azamiye" کے نام سے لکھا۔

منھج الشیخ الالبانی،لتضعیف بعض الاحادیث فی الصحیحین۔

Manhajul Sheikh Al Albani Litazeefy Bazil Ahadith Fe sahihyn

بیان اوھام الالبانی فی تحقیقہ لکتاب فضل الصلاۃ علی النبی ﷺ

Bayano aohamil Albaniye fe tehqeeqhi li Kitabih fazli Silaty alal Nabiyye

انوار المصابیح علی ظلمات الالبانی فی صلاۃ التراویح۔

Anwar ul Masabihy ala zulumatul Al Albani fe salatyl tarawih

التشبیھات علی رسالۃ الالبانی فی الصلاۃ

Al Tashbihat Ala risalatul Albani fil salat

تنبیہ القاری لتضعیف ماقواہ الالبانی

Tanbihul Qari litazeefy ma qawwahul Albani

انہی ناقدین میں سے ایک عصر حاضر کے مشہور محقق علامہ محمد شعیب ارنؤوط ہیں۔کچھ قبل شیخ ارنؤوط کے معروف شاگرد علامہ ابراھیم زیبق نے ان کے حالات اور علمی خدمات پر ایک کتاب لکھی:"المحدث العلامۃ الشیخ الارنؤوط، سیرتہ فی طلب العلم وجھودہ فی تحقیق التراث"اس کتاب میں علامہ البانیؒ پر تنقیدات کو مابین الشیخین شعیب الارنؤوط ومحمد ناصر الدین الالبانیؒMa binashaikhyn Shuaib al Arnawoot Wa Muhammad Nasir u din Al Albani

کے عنوان سے الگ باب میں لکھا گیا ہے۔ اس کتاب کےایک حصہ میں علامہ البانی ؒ کی تحقیقات کے متعلق ان کی بعض تنقیدی آراء کا تذکرہ ہے ۔

الزیبق،ابراہیم۔المحدث العلامہ الشیخ شعیب الارنؤوط۔سیرتۃ فی طلب العلم وجھودہ فی تحقیق التراث۔بیروت:مکتبہ دار البشائر الاسلامیہ،ج: 1،ص:199

Al zybaq, Ibrahim-Al muhadith Al Allama Al Sheikh Shoaib al arnaot Seeratoho fe talabil ilmi wa juhodohu fe tahqeeqiturasy beroot: maktaba darul bashayr al Islamia, Vol:1, p:199

ابن حجر العسقلانی ،احمد بن علی۔ھدایۃ الرواۃ الی تخریج احادیث المصابیح والمشکاۃ ۔القاہرہ:دار ابن القیم،ج:1،ص:105،رقم الحدیث:108

Ibn e Hajril Asqalani, Ahmad bin Ali-Hadayat r ruwaty ila takhrijy Ahadith l masabihy wal mishqat- Al qahira: daro ibn l qayyemy, Vol:1, P:105, H. No:108

البانی،محمد ناصر الدین۔صحیح الجامع الصغیر۔بیروت:دار الکتب العلمیہ2012ء،رقم الحدیث71420

Albani, Muhammad Nasir ul din- sahih l jamye l sagir- beroot: dar ul kutub ul Ilmia 2012 H. No 71420

القرآن ، التکویر8:81

Al Quran, Al takweer 81:8

الزیبق،ابراہیم ۔ المحدث العلامہ الشیخ شعیب الارنؤوط۔سیرتہ فی طلب العلم وجھودہ فی تحقیق التراث۔بیروت:مکتبہ دار البشائر الاسلامیہ، ج:1،ص:200

Al zybaq, Ibrahim-Al muhadith Al Allama Al Sheikh Shoaib al arnaot Seeratoho fe talabil ilmi wa juhodohu fe tahqeeqiturasy beroot: maktaba darul bashayr al Islamia, Vol:1, p:200

سجستانی ابو داؤد،سلیمان بن اشعث۔کتاب السنۃ۔دارالسلام،ج:4،ص:582،رقم الحدیث:4717

Sajistani Abu Daood, Suleiman bin Ashas – Kitaab Al Sunah- darul ssalam, vol:4,p:582, H. No 4717.

ابن حبان،محمد بن حبان بن احمد بن حبان۔الاحسان فی تقریب صحیح ابن حبان۔بیروت:مؤسسۃ الرسالہ1988ء،رقم الحدیث7480

Ibn e Hibban. Muhammad bin hibban bin ahmad bin hibban- Al ihsan fe taqreeb sahih ibn e habban- beroot: Maosassatul Risalah1988, H. No 7480

الطبرانی،سلیمان بن احمد۔ المعجم الکبیر۔ج:10،ص:114،رقم الحدیث:10059

Al Tabrani, Suleiman bin Ahmad- Al moajim ul Kabeery- vol:10,p:114, H. No 10059

السیوطی،جلال الدین عبد الرحمن بن ابی بکر۔جامع الصغیر۔القاہرہ:دار الحدیث2010،ج:1،ص:625،رقم الحدیث 9659

Al Seeyooti, Jalaal ul din Abdul rehman bin Abi Bakr- Jamy ul Saghir- Al qahira: Darul Hadith2010, vol:1,p:625, H. No 9659

المناوی،محمد عبد الرؤف۔فیض القدیر شرح الجامع الصغیر،ج:6،ص:371،

Al Manawi, Muhammad Abul Raoof- Fyzul Qadeer Sharhul Jamye ul sagheer, vol:6,p:371

النسائی ،احمد بن شعیب۔ السنن الکبریٰ۔بیروت:دار الکتب العلمیہ1991ء،ج:6،ص:507،رقم الحدیث 11649

Al Nasai, ahmad bin Shoaib- Al sunanul kubra- beroot: Dar ul Kutub Al ilmi 1991vol:6,p:507, H. No 11649

الطبرانی،سلیمابن احمد بن ایوب۔ المعجم الکبیر۔ بیروت: دار الکتب العلمیہ،ج:7،ص:44،رقم الحدیث:15923 من طرق داؤد

Al Tabrani, Suleiman bin Ahmad bin ayub- Al maojamul kabeer – beroot: Dar ul Kutub Al ilmi, vol:7,p:44, H. No 15923

ابن عبد البر،یوسف بن عبد اللہ بن محمد۔التمھید لما فی المؤطا من المعانی والاسانید ۔ج:18،ص:120

Ibn e Abdul barr, yousuf bin Abdullah bin Muhammad Al tamheedo lima fil moatta minal maani wal asanidy, vol:18,p:120,

ھیثمی،نور الدین۔مجمع الزوائد و منبع الفوائد ۔بیروت: دار لفکر،ج:1،ص:119

Haisami, Noor ul din- Majma o zawaid wa min baul fawaedy- beroot: dar ul fikr, vol:1,p:119,

الشیبانی۔احمد بن حنبل ۔تحقیق المسند،ج:25،ص:268

Al Shaibani-Ahmad bin Hanbal-tahqeequl al musnad, vol:25,p:268

تعارض:دو حدیثوں کا مفہوم کے اعتبار سے ایک دوسرے کے منافی ہونا اور ان کی منافات کے رفع کےلیے کوئی وجہ نہ مل سکنا

متوقف فیہ:دومتعارض حدیثیں ہیں جو صحت میں برابر ہوں مگر نہ اس میں جمع ممکن ہو ،نہ تقدم و تاخر ثابت ہو اور نہ ہی ایک کو دوسرے پر ترجیح دینا ممکن ہو تو جب تک ان حدیثوں میں سے کسی ایک کی کوئی صورت ظاہر نہ ہو تو توقف کیا جائے گا اور کسی پر بھی عمل نہیں کیا جائیگا اور وہ احادیث متوقف فیہ کہلائیں گی۔نزھۃ النظر شرح نخبۃ الفکر لابن حجر العسقلانی،ص؛62

البانی،محمد ناصر الدین ۔سلسسلۃ الاحادیث الصحیحۃ وشیئ من فقھھا وفوائدھا،ج:1،ص:460

Albani, Muhammad Nasir ul din Silsila tul Ahadith Al sahiha Wa shai min fiqhiha wa fawaydiha, vol:1,p:460

ابن حجر العسقلانی، احمد بن علی۔ھدایۃ الرواۃ الی تخریج احادیث المصابیح والمشکاۃ۔تحقیق البانی،تعلیق حدیث:108،ج:1،ص:106

Ibn e Hajr Al Asqalani, Ahmad bin Ali- Hadaya tul ruwaty Ila takhrijy Ahadith l masabihy Wal mushqaty Tehqeequl Albani Taaleeq hadith, Taleeq Hadith:108,vol:1,p:106

الصنعانی، محمد بن اسماعیل ۔التنویر شرح الجامع الصغیر،ج:11،ص:53

Al Sanaani, Muhammad bin ismail- al tanveer Sherhil jamye al saghir, vol:11,p:53

البیضاوی،ناصر الدین۔تحفۃ الابرار شرح مصابیح السنۃ،ج:1،ص:110

Al baizavi, Nasir ul din tohfatul abrare sharh e masabih e Sunnah, vol:1,p:110

ابن الملک الرومی،محمد بن عبد اللطیف بن عبد العزیز الکرمانی،شرح مصابیح السنۃ،ج:1،ص:129

Ibn ul malik al roomi, Muhammad bin abdul latif bin abdil aziz al kirmani, sharhu masabih al Sunnah, vol:1,p:129

الکوفی،حسین بن محمود الزیدانی۔المفاتیح فی شرح المصابیح،ج:1،ص:228

Al koofi, Hussain bin Mehmood al zaidani- Al mafatiho fe sharhil masabih, vol:1,p:228

ابن قیم الجوزی،حافظ شمس الدین۔طریق الھجرتین وباب السعادتین ،ج:2،ص:387

Ibn o qayyam al jaozi, hafiz shams ul din- tareeq ul hijratyni wa babul saadatain, vol:2,p:387

بخاری،صحیح بخاری،کتاب الجنائز ،باب ما قیل فی اولاد المشرکین، رقم الحدیث:1384

Bukhari, sahih bukhari, kitabul janaiz, babu maqeela fe awladil mushrikeen, H. No 1384

مسند امام احمد بن حنبل،ج12،ص:322،رقم الحدیث13243،(اسنادہ ضعیف لجھالۃ محمد بن عثمان)۔مجمع الزوائد و منبع الفوائد۔کتاب القدر،باب ماجاء فی الاطفال ،رقم :11940۔مسند احمد بن حنبل ،ج:12،ص:322،رقم :13243،’’اسنادہ ضعیف لجھالۃ محمد بن عثمان‘‘، یہ قول بھی مرجوح ہے اور سند میں انقطاع ہے۔

Musnad Imam ahmad bin hanbal vol:12,p:322, H. No 13243

الموصلی،احمد بن علی المثنیٰ۔مسند ابی یعلیٰ،رقم الحدیث:4101،4102،من طریق عبد العزیز بن ابی سلمۃ واسنادہ ضعیف تضعف یزید ،ھو ابن ابان الرقاشی،”فھم خدام اھل الجنۃ“ کے بارے میں ابن تیمیہؒ فرماتے ہیں ”ولااصل لھذا القول “یہ من گھڑت بات ہے۔(مجموع الفتاویٰ، ج:4،ص:297)

Al moosili , Ahmad bin Ali al musanna- musnad abi yala, H. No 4101,4102

ابن قیم الجوزی،شمس الدین۔طریق الھجرتین وباب السعادتین،ج:1،ص:521

Ibn e Qayyim al jaozi sham sul din- Tareeq al hijratain wa bab ul saadatyn, vol:1,p:521

ابن قیم الجوزی،شمس الدین۔تھذیب السنن، ج:7،ص:87

Ibn e Qayyim al jaozi, Sham ul din- Tehzeeb ul sunany, vol:7,p:87

ابن قیم الجوزی،شمس الدین۔ طریق الھجرتین وباب السعادتین،ص:519

Ibn e Qayyim al jaozi sham sul din- Tareeq al hijratain wa bab ul saadatyn, p:519

ابن حجر العسقلانی،احمد بن علی۔فتح الباری شرح صحیح البخاری،ج:3،ص:313

Ibn e Hajr Al Asqalani, Ahmad bin ali- fat hul bari sharho sahih ul bukhari, Vol:3, P:313


Refbacks

  • There are currently no refbacks.




Creative Commons License
This work is licensed under a Creative Commons Attribution 3.0 License.